ٹیکس واپس لو ، پراپرٹی ڈیلروں کا قومی اسمبلی کے سامنے بھوک ہڑتال کا اعلان

ٹیکس واپس لو ، پراپرٹی ڈیلروں کا قومی اسمبلی کے سامنے بھوک ہڑتال کا اعلان

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)ڈی ایچ اے اسٹیٹ ایجنٹس ایسوسی ایشن لاہور کی اپیل پر ٹیکسز کے خلاف پراپرٹی ڈیلرز کا احتجاجی مظاہرہ ،لالک چوک میں ہونے والے مظاہرے میں FBRاور وزیر خزانہ کے خلاف زبردست نعرے بازی ،پراپرٹی ڈیلرز کے یکم جولائی2016ء کے بعد نافذ کیے گئے ٹیکسز واپس نہ لینے کے خلاف قومی اسمبلی کے سامنے بھوک ہڑتال کرنے کا اعلان،احتجای مظاہرے سے میجر رفیق حسرت ،خالد محمود چودھری،آصف جہانگیر،ارشد کھوکھر،شیخ احتشام،ابو بکر بھٹی اور دیگر کا خطاب،رہنماوں نے موجودہ حکومت کو کاروبار دشمن قرار دتے ہوئے کہا وزیر خزانہ کی ملک دشمنی پالیسیاں اور دبئی میں کاروبار کرنے والوں کے لیے نوازشات بے نقاب ہو رہی ہیں ،اربوں روپے باہر منتقل ہو گئے ہیں پراپرٹی کے کاروبار سے وابستہ افراد بے روزگار ہو رہے ہیں ،دفتر بند ہو رہے ہیں حکومتی ریونیو نہ ہونے کے برابر رہ گیا ہے حکمران اقتدار کے نشے میں کسی کی بات سننے کے لیے تیار نہیں ،میجر رفیق حسرت نے کہا حکومتی اقدامات ہمارا معاشی قتل ہے 30جون2016ء سے پہلے کا ٹیکس ٹیرف بحال کیا جائے ورنہ ہم اسلام آباد کا رخ کریں گے اور مطالبات تسلیم ہونے تک قومی اسمبلی کے سامنے بھوک ہڑتال کریں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1