فلسطینی شہریوں نے ایک ہفتے کے دوران تین عالمی ایوارڈز اپنے نام کرلیئے

فلسطینی شہریوں نے ایک ہفتے کے دوران تین عالمی ایوارڈز اپنے نام کرلیئے

غزہ (اے این این)اسرائیلی مظالم اور طرح طرح کی پابندیوں کے باوجود فلسطینی قوم نے عالمی اداروں میں خود کو نہ صرف زندہ رکھا ہوا ہے بلکہ اپنی بے پناہ صلاحیتوں سے دنیا کو متاثر بھی کیا جا رہا ہے۔ظلم اور بربریت کی سیاہ رات میں فلسطینی شہری اپنی ہمت اور صلاحیتوں سے روشنی کی کرن روشن کررہے ہیں۔ ایک ہفتے کے دوران فلسطینی شہریوں کو تین عالمی ایوارڈز سے نوازا گیا۔

یہ بلا شبہ فلسطینی قوم کی صلاحیتوں کا برملا اعتراف ہے۔ فلسطینی میڈیا رپورٹس کے مطابق گذشتہ ایک ہفتے کے دوران فلسطینیوں کو عالمی اداروں سے ملنے والے ایوارڈز پر ایک انفو فلم میں روشنی ڈالی ہے۔پہلا ایوارڈ،شاہ عبدالعزیز مقابلہ حفظ قرآن۔ اس مقابلے میں رام اللہ سے احمد بدیع طہ نے شرکت کی اور ایوارڈ جیت لیا۔دوسرا مقابلہ عرب دنیا میں کتاب بینی کا ہوا جس میں غرب اردن کے شہر نابلس میں قائم طلائع اسکول نے پہلی پوزیشن حاصل کی۔تیسرا مقابلہ قرآن کے حوالے مختلف مہارتوں کے بارے میں تھا جو قلقیلیہ کے الشیخ ملحم نے جیت لیا۔

مزید : عالمی منظر