نئے سینما گھروں کی تعمیر مستقبل کیلئے خوش آئندہ ہے : شوبز شخصیات

نئے سینما گھروں کی تعمیر مستقبل کیلئے خوش آئندہ ہے : شوبز شخصیات
نئے سینما گھروں کی تعمیر مستقبل کیلئے خوش آئندہ ہے : شوبز شخصیات

  

لاہور(فلم رپورٹر)پاکستان میں نئے سینماء گھروں کی تعمیرات میں اضافہ، فلم انڈسٹری کے ریوائیول کے ساتھ ہی نئے سینماء گھروں کی ضرورت محسوس کرتے ہوئے سرمایہ کاروں نے سینماء گھروں میں سرمایہ کاری شروع کر دی ہے۔ اس حوالے سے اطلاعات ہیں کہ شروع میں ملک کے بڑے شہروں میں جدید طرز کے ملٹی پلکس سینماء گھر تیار کئے جارہے ہیں رواں سال ملک میں سینماء گھروں کی تعمیرات میں زبردست اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔ جبکہ کچھ پرانے بوسیدہ سینماء گھروں کو بھی جدید طرز پر بنانے کی منصوبہ بندی کی جارہی ہے۔ سینکڑوں کی تعداد میں قائم پاکستان میں سینماء گھروں کی تعداد نا ہونے کے برابر رہ گئی تھی جس کی وجہ لالی ووڈ کی فلموں کا نا بننا تھا جبکہ متعدد سینماء مالکان نے سینماء گھروں کو فروخت کرکے رہائشی عمارتیں یا شاپنگ سینٹر بنا دیا تھا۔ اب جبکہ پاکستان میں نئے سرے سے لالی ووڈ انڈسٹری کا دوبارہ جنم ہوا ہے اور فلمیں باکس آفس پر بزنس کررہی ہیں جبکہ بالی ووڈ اور لالی ووڈ کی فلمیں بھی پاکستان میں اچھا بزنس کرتی دکھائی دے رہی ہیں تو ایسے حالات میں سینماء ایک منافع بخش کاروبار بنتا جارہاہے۔ پاکستان کے بڑے شہروں کراچی، لاہور، اسلام آباد، مری، گجرانولہ، گجرات، حیدرآباد، لاڑکانہ، راولپنڈی میں جدید طرز کے سینماء گھروں کی تعمیرات مکمل ہوکر فلموں کی نمائش جارہی ہے جبکہ آج پاکستان کے شہر سیالکوٹ میں ایک نیا ملٹی پلکس سینماء گھر نمائش کے لئے کھولا گیاہے۔ اداکارہ مایا سونو خان اور نیلم منیر خان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں معیاری فلم سازی ہورہی ہے ملک میں جتنے زیادہ سینماء گھرہوں گے ہماری فلمیں اور فلم پر سرمایہ کاری کرنے والے دونوں ترقی کریں گے۔ اداکارشان شاہد، احسن خان ،ہمایوں سعید اور اظفر رحمان کا کہنا تھا کہ نئے سینماء وقت کی اہم ضرورت بن چکے ہیں سینماؤں کی تعداد جتنی زیادہ ہوگی فلمیں کم وقت میں اپنا بجٹ نکالنے کی پوزیشن میں آئیں گی۔سید جہانزیب علی،عباس باجوہ،جنید ملہی،آغا حیدر،ندا چودھری ،ظفر عباس کھچی،شوکت چنگیزی،حاجی عبد الرزاق،چوہدری اعجاز کامران ،قیصر ثناء اللہ خان ،ڈاکٹر اجمل ملک ،ملک طارق،کوریو گرافر راجو سمراٹ ،ارشد چوہدری ،اسحاق چوہدری اور دیگر نے بھی ملے جلے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سینماء گھروں پر سرمایہ کاری کرنے والوں کی حوصلہ افزائی ضروری ہے۔اگر یہ سلسلہ جاری رہا تو وہ دن دور نہیں ہے جب ہماری فلمی صنعت ایک بار پھر عروج حاصل کرلے گی۔نئے ملٹی پلکس بننے سے ہمارے ملک میں ایک بار پھر سنیماء کلچر فروغ پا رہا ہے۔

مزید : کلچر