کرپشن ملک لوٹنے والے دندناتے پھر رہے ہیں ، طاہر القادری

کرپشن ملک لوٹنے والے دندناتے پھر رہے ہیں ، طاہر القادری

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر محمد طاہر القادری نے کہا ہے کہ یہ کیسا احتساب ہے کہ اربوں روپیہ لوٹنے اور 14 بے گناہوں کو قتل کرنیوالے دندناتے پھر رہے ہیں ۔ قاتلوں ، لٹیروں کے گروہ نے ملکی اداروں کے خلاف نئی سازشوں کیلئے لندن میں پڑاؤ ڈال لیا۔احتساب میں نرمی کی وجہ سے کرپٹ ٹولہ قوانین کا مذاق اڑا رہا ہے ، کرپشن ریفرنسز کے بر وقت فیصلوں کیلئے(بقیہ نمبر34صفحہ12پر )

نواز شریف کو وطن واپسی پر گرفتار کر کے جیل میں ڈالا جائے اور شہباز شریف کو سانحہ ماڈل ٹاؤن کیس میں ’’اندر‘‘ کیا جائے ، نواز شریف اور شہباز شریف دونوں قاتل،لٹیرے اور معاشی دہشتگردی میں ’’بھائی وال‘‘ ہیں عوام انکا عبرت ناک انجام دیکھنا چاہتے ہیں۔ وہ گزشتہ روز عوامی تحریک کے وکلاء سے ٹیلی فون پر گفتگو کر رہے تھے ۔انہوں نے کہا کہ تین سال کے بعد بھی جسٹس باقر نجفی کمشن کی رپورٹ پبلک نہیں ہو رہی ، رپورٹ پبلک ہونے سے انصاف کا راستہ ہموار ہو گا اور قانون کے ہاتھوں کو قاتلوں کے گریبانوں تک پہنچنے میں مدد ملے گی ۔ انہوں نے کہا کہ جلیانوالہ باغ کے بعد سانحہ ماڈل ٹاؤن سرکاری بندوقوں سے شہریوں کو چھلنی کئے جانے کا دوسرا بڑا سانحہ ہے ،جلیانوالہ باغ کے سانحہ میں تو غاصب اور قابض انگریز کی حکومت ملوث تھی مگر سانحہ ماڈل ٹاؤن میں اسلام اور جمہوریت کا دم بھرنے والے ملوث ہیں ۔انہوں نے کہا کہ عدالت میں دلائل کے نام پر قاتلوں کے ترجمان انسانیت کی توہین اور ظالموں کے مددگار بنے ہوئے ہیں۔کوئی کہتا ہے رپورٹ پبلک ہوئی تو فسادات ہونگے ،کوئی کہتا ہے رپورٹ ٹرائل پر اثر انداز ہو گی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر