ملک میں جب تک قانون کی حکمرانی نہ ہو کوئی حکومت چل نہیں سکتی: سراج الحق

ملک میں جب تک قانون کی حکمرانی نہ ہو کوئی حکومت چل نہیں سکتی: سراج الحق

  

لاہور (آن لائن) امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ انصاف کے نام پر آنے والی حکومت چودہ ماہ میں انصاف نہیں کر سکی۔ پانامہ کے 436 ملزموں کو ایک بار بھی عدالت میں نہیں بلایا گیا۔ جماعت اسلامی سب کا بے لاگ احتساب چاہتی ہے۔ ملک میں جب تک قانون کی حکمرانی نہ ہو، کوئی حکومت چل نہیں سکتی۔ تاجروں کی ہڑتال نے ثابت کردیا کہ پی ٹی آئی حکومت معیشت میں کوئی بہتری نہیں لاسکی۔ حکومت کی گاڑی کولہو کے بیل کی طرح ایک ہی جگہ گھوم رہی ہے۔ چاول اور گنے کے کاشتکاروں کو ان کی محنت کا معقول معاوضہ ملناچاہیے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے ثمر باغ میں کارکنوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ حکومتی گاڑی ایک ہی جگہ کھڑی ہے۔ معیشت کا پہیہ الٹا گھوم رہاہے۔ تاجروں کی ایک دن کی ہڑتال سے ملکی خزانے کو اربوں روپے کا نقصان ہوا۔ دنیا میں پٹرول سستا اور پاکستان میں ایک بار پھر مہنگا کردیا گیاہے۔ یوریا کھاد کی قیمت میں تین سو روپے فی بوری اضافہ کردیا گیاہے جس سے کسانوں کے لیے گندم کی کاشت مشکل ہوگئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ کسان خوشحال ہوگا تو زراعت میں بہتری آئے گی اور ملکی معیشت خوشحالی کے راستے پر گامزن ہوگی۔

سراج الحق

مزید :

علاقائی -