زرداری کے دل میں کلاٹ کی نشاندہی،شوگر، کمزوری سے کپکپاہٹ طاری

  زرداری کے دل میں کلاٹ کی نشاندہی،شوگر، کمزوری سے کپکپاہٹ طاری

  



اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) پاکستان انسٹیٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز میں زیر علاج سابق صدر آصف علی زرداری کے دل کے وال میں کلاٹ کی نشاندہی ہوئی ہے،البتہ ان کے پلیٹ لیٹس ایک لاکھ 35 ہزار تک پہنچ گئے ہیں۔ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ سابق صدر کو کمزوری اور شوگر کی وجہ سے ہاتھوں میں کپکپاہٹ کی شکایت بھی ہے جب کہ ان کے پرانے سٹنٹ کے باعث دل کے وال میں کلاٹ بھی پیداہو گیا ہے۔ ہسپتال ذرائع کے مطابق ڈاکٹروں نے آصف علی زرداری کیلئے تھیلیئم اسکین کو لازمی قراردے دیا ہے۔ادھر پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے ترجمان مصطفی نواز کھوکھر نے سابق صدر آصف علی زرداری کے علاج کے لئے پرائیویٹ میڈیکل بورڈبنانے کا مطالبہ کیا ہے۔ ترجمان نے زرداری کی صحت کو لاحق خطرات کی وجہ سے حکام کو پرائیویٹ بورڈ بنانے کی درخواست دی ہے۔ سینیٹر مصطفی نواز کھوکھر نے کہا کہ پرائیویٹ میڈیکل بورڈ بنانے کا مطالبہ سرکاری ڈاکٹروں کی سفارشات کی روشنی میں کر رہے ہیں،ان کی شریانوں میں خون جم جانا زندگی کے لئے خطرناک ہے جبکہ سابق صدر کا شوگر لیول بھی خطرناک حد تک اوپر نیچے ہو رہا ہے۔ ارتھو بیرنگ نہ ملنے کی وجہ سے آصف علی زرداری کی کمر کا دیرینہ مرض شدت اختیار کر گیا ہے۔

زرداری،میڈیکل

مزید : صفحہ اول