داتا دربار ہسپتال کی انتظامیہ نے ہڑتال کو مسترد کردیا: مریضوں کی آمد میں 200فیصد اضافہ

داتا دربار ہسپتال کی انتظامیہ نے ہڑتال کو مسترد کردیا: مریضوں کی آمد میں ...

  

لاہور(جاوید اقبال)محکمہ اوقاف کے داتا دربار ہسپتال کی انتظامیہ نے گرینڈ ہیلٹھ الائنس کی ہڑتال کی کال مسترد کر دی اور ہسپتال کو مریضوں کے لے کھول دیا ہے داتا دربار ہسپتال ہڑتال نہ کرنے والا لاہور کا پہلا ہسپتال بن کر سامنے آگیا، ہڑتال نہ ہونے کے باعث اس ہسپتال میں مریضوں کی آمد میں دو سو فیصد اضافہ ہو گیا ہے دوسری طرف شعبہ مراض نسواں اور اور آئی میں رش کے باعث بیڈکم پڑ گے ہیں شبعہ پیڈز میں بھی بیمار بجوں کی آمد میں پچاس فیصد اضافہ ہو گیا یہ صورت حال گزشتہ روز ہسپتال میں گئے گئے سروے کے دوران سامنے آئی، سروے کے دورن بتایا گیا کہ داتادربار ہسپتال کو بند کروانے کے لیے گرینڈ ہیلتھ الائنس کے مختلف رہنماؤں نے تین دفعہ ہلہ بولا اور اسپتال میں ہڑتال کروانے کے لیے کوشش کی مگر اسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر عبدالحمید اور گائنی سربراہ ڈاکٹر فرینہ چیمہ،ڈاکٹر جاوید اقبال،ڈاکٹر گل خان نے ان کے سامنے پل باندھ دیا اور کہا کہ وہ اسپتال سے نکل جائیں یہاں کا کوئی عملہ،ڈاکٹر و نرس ہڑتال پر نہیں جائیں گے۔اس حوالے سے ایم ایس ڈاکٹر عبدالحمید نے روزنامہ ”پاکستان“سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہمارا ہڑتال سے کوئی تعلق نہیں۔مریضوں کے علاج معالجے کے حلف کی خلاف ورزی نہیں کریں گے۔

اور نا ہی ہمارے ڈاکٹرز و عملہ اس حلف کی خلاف ورزی کرے گا۔گائنی،آپریشن تھیٹرز،لیبر روم شعبہ آئی سمیت تمام شعبہ جات میں معمول کے مطابق کام ہو رہا ہے اور یہی وجہ ہے کہ یہاں مریضوں کی تعداد میں اضافہ ہو رہا ہے اور ہم ہر کسی کو علاج معالجہ کی سہولیات مفت فراہم کر رہے ہیں۔

لاہور کا یہ و احد اسپتال ہے جو ہڑتال کا حامی نہیں ہے

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -