اسد عمر نے اپوزیشن بیانئے کی ایسی خطرناک تشریح کر دی کہ حکومت مخالف جماعتوں کے ہوش اڑ جائیں

اسد عمر نے اپوزیشن بیانئے کی ایسی خطرناک تشریح کر دی کہ حکومت مخالف جماعتوں ...
اسد عمر نے اپوزیشن بیانئے کی ایسی خطرناک تشریح کر دی کہ حکومت مخالف جماعتوں کے ہوش اڑ جائیں

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی وزیر اسد عمر نےحکومت مخالف جماعتوں کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے چند ہفتوں سے ریاست مخالف بیانیہ پھیلایا جا رہا ہے،عدلیہ اور فوج کے کردار پر حملے ہو رہے ہیں،سزا یافتہ قیدی ،مفرور اور اشتہاری نوازشریف نےلندن میں بیٹھ کراداروں پرحملہ کیا،قومی اسمبلی میں ایاز صادق نے بالاکوٹ حملے کے منہ توڑ جواب کی تاریخ کو مسخ کرنے کی کوششش کی،مسلم لیگ ن نےمریم صفدرکےنام پرمادرملت کےنعرےلگادئیے،اپوزیشن کابیانیہ حکومت نہیں ریاست کےخلاف ہے،اپوزیشن کےبیانیےکاہدف پاکستان کی وحدنیت اورادارےہیں،اپوزیشن یہ کیسا بیانیہ اپنا رہی ہے جو ریاست پاکستان کے خلاف ہے؟بھارت کا یہ اِن ڈائریکٹ حملہ بھی کامیاب نہیں ہو گا۔

تفصیلات کے مطابق مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ پر اپنے ویڈیو پیغام میں اسد عمر نے کہا کہ چند ہفتوں سے پاکستان کی سیاست ایک انتہائی خطرناک رخ اختیار کر گئی ہے،سیاست کے اندر اپوزیشن حکومتوں پر تنقید کیا کرتی ہے،حکومت مخالف بیانیہ ہوتا ہے ،جلوس ہوتے ہیں،جلسے ہوتے ہیں اور دھرنے بھی ہوتے ہیں لیکن ہم پچھلے دو تین ہفتوں سے دیکھ رہے ہیں کہ اپوزیشن کی طرف سے مسلسل ایک بیانیہ آ رہا ہے جس میں ہدف حکومت نہیں پاکستان کے ادارے نظر آ رہے ہیں،اپوزیشن کا ہدف وہ ہے جس پر پاکستان کی وحدانیت ہے،اپوزیشن کا ہدف وہ مقتدر شخصیات ہیں جن کے اوپر سب  کا اتفاق ہے اور وہ پاکستان میں اتحاد کا ذریعہ بنتے ہیں ،یہ سلسلہ گوجرانوالہ جلسہ میں لندن میں بیٹھے ایک سزا یافتہ قیدی،مفرور اور اشتہاری نواز شریف کی تقریر سے شروع ہوا جب باہر سے بیٹھ کر انہوں نے باقاعدہ پاکستان پر حملہ کیا ،نواز شریف نے پاکستان کے تین چیف جسٹس صاحبان کے فیصلوں کو صرف  تنقید کانشانہ نہیں  بنایا بلکہ کہا کہ وہ فیصلے آزاد نہیں تھے اور بد نیتی پر مبنی تھے،کراچی میں شرمناک مناظر دیکھنے میں آئے،نواز شریف کے داماد اور مریم نواز کے شوہر کیپٹن صفدر نے قائد اعظم کے مزار کی بے حرمتی کی ،مزار قائد کا جنگلا پھلانگا اور چھلانگیں لگاکرسیاسی نعرےبازی کی گئی،اس موقع پر مریم نواز سمیت ن لیگی قیادت سامنے کھڑے تماشا دیکھتے رہے اور کسی نے بھی شرمندگی کا اظہار نہیں کیا ۔

اسد عمر نے کہا کہ کراچی جلسےمیں محموداچکزئی نےاردوزبان کےخلاف بات کی،ایک قومی زبان کو انہوں نے کہہ دیا کہ یہ ہماری زبان ہی نہیں اور اردو کو قومی زبان ماننے سے انکار کر دیا ،اویس نورانی نےآزادبلوچستان کی بات کی تو  اپوزیشن نے سٹیج پر موجود ہونے کے باوجود اس ہرزہ سرائی کی تردیدنہیں کی،ایازصادق نےقومی اسمبلی میں عجیب وغریب بات کی، پچاس سے زیادہ لوگ اس میٹنگ میں شریک تھے جس کی بات ایاز صادق نے کی اور اب  سال بعد ان کو یاد آیا ہے ،اپوزیشن یہ کیسا بیانیہ اپنا رہی ہے جو ریاستِ پاکستان کے خلاف ہے، پچاس سے زیادہ لوگ اس میٹنگ میں شریک تھے جس کی بات ایاز صادق نے کی اور سال بعد اب  ان کو یاد آیا ہے ،بالاکوٹ حملےکےمنہ توڑ جواب کی تاریخ کومسخ کرنےکی کوشش کی گئی،دنیانےحقیقت دیکھی پاکستان نےکس طرح بھارت کوشکست دی اور دنیا کے سامنے بھارت کو شکست اٹھانا پڑی تھی،ہماری بہادر افواج نے بھارت کے ڈائریکٹ حملےکوناکام بنایا،اِن ڈائریکٹ حملہ بھی کامیاب نہیں ہوگا۔

مزید :

قومی -