مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پراُمت مسلمہ  خون کے آنسو رو رہی ہے، مقررین

مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پراُمت مسلمہ  خون کے آنسو رو رہی ہے، مقررین

  

 لاہور(نمائندہ خصوصی) جمعیت علماء پاکستان کے زیر اہتمام جامع المرکزالاسلامی والٹن روڈ پرمقبوضہ کشمیر پر بھارت کے قبضہ کے74سال ہونے پریوم سیاہ کے موقع پر ”کشمیر پاکستان کی شے رگ“ کے عنوان پر ایک فکری نشست صدارت حافظ نصیر احمد نورانی نے کی۔ جے یو پی کے مرکزی رہنماء مفکر اسلام علامہ قاری محمد زوار بہادر نے خصوصی خطاب کیا۔ نشست سے مفتی تصدق حسین،رشید احمد رضوی،محمد ارشد مہر،حافظ محمد سلیم اعوان ودیگر مقررین نے بھی خطاب کیا۔علامہ قاری محمد زوار بہادر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی صورت حال پرامت مسلمہ کا ہر فرد خون کے آنسو رو رہا ہے۔ نبی کریم ؐ کے امتی لاکھوں کی تعداد میں مقبوضہ کشمیر میں بھارتی بربریت کا شکار ہیں۔ کشمیری عوام 3سال سے کرفیو میں ہیں۔ عالم اسلام کے بے حس حکمرانوں اور اقوام عالم کو ان مظلوم کشمیری عوام پر بھارتی مسلح افواج اور غنڈوں کا ظلم وجبر دکھائی نہیں دے رہا۔ ہماری مسلمان بہنوں، بیٹیوں کی عزت کو تار تار کیا جارہا ہے مگر بے غیرت مسلم حکمران بے حسی کی تصویر بنے یہ سب تماشہ خاموشی سے دیکھ رہے ہیں کیا یہ بدترین سلوک اْمت مسلمہ کے ضمیر کو جگانے کیلئے کافی نہیں ہے آج یہ مظلوم کشمیری بہن بیٹیاں اور مائیں کسی محمدبن قاسم اور محمود غزنوی کا انتظار کررہی ہیں۔ کشمیر کی آزادی سے ہی پاکستان کی تکمیل ہے کشمیری عوام کی جدوجہد رنگ لگائے گی اور وادی کشمیر میں آزادی کا سورج جلد طلوع ہوگا مودی سرکار بھارت کے ٹکڑے ٹکڑے کردے گی جو پاکستان اور کشمیریوں کی دشمنی میں اندھی ہو چکی ہے۔بھارت مقبوضہ کشمیر میں اب تک لاکھوں کشمیری بے گناہوں کا خون بہا چکا ہے اور وہاں مسلسل کشمیریوں کے خلاف ظلم وستم کا بازار گرم رکھے ہوئے ہے رہنماؤں نے کہا کہ آزادی کشمیر کی تحریک بے مثال قربانیوں سے بھری پڑی ہے بھارت ہر حالت میں کشمیری عوام کی جدوجہد کو دبانا چاہتا ہے جب کہ پاکستان کے ساتھ اس کا رویہ ہمیشہ دشمنی پر مبنی رہا ہے۔ گزشتہ 74 سالوں میں کشمیری عوام نے جو قربانیاں دیں ہیں دْنیا ان کی مثال پیش کرنے سے قاصر ہے۔4219630

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -