سکھر،شہرکا نکاسی نظام درست نہ ہوسکا،امختلف مقامات پرگٹر ابل پڑے  

  سکھر،شہرکا نکاسی نظام درست نہ ہوسکا،امختلف مقامات پرگٹر ابل پڑے  

  

 سکھر(ڈسٹرکٹ رپورٹر)سکھر شہرکا نکاسی نظام درست نہ ہوسکا،اسٹیڈیم روڈ سمیت مختلف مقامات پرنالیاں اور گٹر ابل پڑے،شہریوں اور مسافر گاڑیوں کوآمدو رفت میں مشکلات کا سامنا،شہری حلقوں کی انتظامیہ پر سخت تنقید، بالا حکام سے نوٹس لیکر شہریوں کو بلدیاتی سہولیات فراہمی کا مطالبہ تفصیلات کے مطابق سکھر انتظامیہ، سکھر میونسپل کارپوریشن، محکمہ پبلک ہیلتھ کے افسران سمیت سکھر کے نو منتخب نمائندگان کی ناقص کارکردگی کی بدولت سندھ کی تیسرے بڑے شہر سکھر میں نکاسی آب کا نظام درست ہونے کے بجائے مزید خراب ہوگیا ہے شہر میں ڈرینج سسٹم ناکارہ ہو جانے کی وجہ سے نالیوں اور گٹروں کا پانی سڑکوں پر جمع ہونا روز کا معمول بنتا جا رہا ہے،گذشتہ روز جناح میونسپل اسٹیڈیم روڈ،عید گاہ روڈ،سول اسپتال روڈ پر ڈرینج نظام بری طرح مفلوج ہو گیا انتظامیہ اور متعلقہ محکموں کے افسران سمیت نومنتخب نمائندگان کی جانب سے نکاسی نظام بہتر بناے کیبلند بانگ دعوئے تو کئیجارہے ہیں لیکن افسوس ابتک شہر کے مختلف تجارتی، کاروباری، رہائشی علاقوں و شہر کی مصروف ترین سڑکوں سے ڈرینج کاجمع پانی نکالا نہیں جا سکا ہے جبکہ نکاسی آب نظام تباہ ہونے کی وجہ سے گندہ پانی تالاب کا منظر پیش کر رہا ہے شہری و سماجی حلقوں نے اس حوالے سے سکھر انتظامیہ بلخصوص عوامی نمائندگان کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ میونسپل کارپوریشن انتظامیہ اورمحکمہ پبلک ہیلتھ کی نااہلی کی وجہ سے شہر لاوارث بن گیا ہے، شہر میں ہر جگہ ڈرینج سسٹم ناکارہ ہو چکا ہے نالیوں اور گٹروں کا گندا پانی روڈوں پرکھڑا ہو جا تا ہے شکایات پر بھی کوئی پرسان حالنہیں انہوں نے بالا حکام سے نوٹس لیکر شہریوں کو بلدیاتی سہولیات فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -