شیخوپورہ:انتظامیہ کی غفلت ،طالبعلم کرنٹ لگنے سے جاں بحق

شیخوپورہ(بیورورپورٹ)گورنمنٹ ہائی سکول کالوکے میں انتظامیہ کی غفلت ولاپرواہی کے باعث نرسری کا کلاس5سالہ طالبعلم آہنی کھڑکی سے کرنٹ لگنے کے باعث تڑپ تڑپ کر جاں بحق ہوگیا ،بچے کی ہلاکت کی اطلاع ملتے ہی ورثاء سراپا احتجاج بن گئے جنہوں نے سکول کے اندر انتظامیہ کے خلاف شدید نعرہ بازی کی احتجاج اور بچے کی ہلاکت کی اطلاع ملتے ہی ڈی ایس پی سٹی راجہ فخر بشیر پولیس کی بھاری نفری کے ہمراہ جائے وقوعہ پر پہنچ گئے جنہوں نے ورثاء سے مذاکرات کے بعد احتجاج ختم کروادیا،یونیفارم میں بچے کی نعش گھر پہنچنے پر صف ماتم بچھ گئی خواتین اور مردوں پر غشی کے دورے پڑتے رہے،بتایا گیا ہے کہ گورنمنٹ ہائی سکول کالوکے میں محنت کش صفدر علی کا معصوم اور خوبصورت بیٹا حصول تعلیم کے لیے سکول میں گیا جہاں پر انتظامیہ کی غفلت ولاپرواہی کے باعث آہنی کھڑکی میں کرنٹ آیا ہوا تھا جیسے ہی معصوم طالبعلم آہنی کھڑی کو ہاتھ رکھ کراٹھنے لگا تو تو وہ کھڑکی سے لٹک گیا اور تڑپ تڑپ کر جاں بحق ہوگیا،واقعہ کی اطلاع ملتے ہی محنت کش صفدر علی کے گھر میں صف ماتم برپا ہوگئی اور ورثاء دھاڑیں مارتے ہوئے سکول میں پہنچ گئیں جہاں پر علاقہ مکین سراپا احتجاج بن گئے جنہوں نے سکول انتظامیہ کے خلاف شدیدنعرہ بازی کرتے ہوئے ڈی سی او شیخوپورہ میڈم کرن خورشید اور وزیر اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف سے مطالبہ کیا ہے کہ ایسی انتظامیہ کے خلاف کاروائی کی جائے جن کی غفلت ولاپرواہی کے باعث سے ہمارا معصوم گل کھلنے سے پہلے ہی مرجھا گیا ہم اپنے بیٹے کی موت کا لہو کس کے ہاتھوں پر تلاش کریں معصوم طالبعلم کے یونیفارم میں جب نعش ورثاء کے گھر میں پہنچی تو خواتین پر غشی کے دورے پڑنے شروع ہوگئے ورثاء صدمے سے نڈھال ہیں۔