محکمہ سپیشل ایجوکیشن بجٹ کا فیصد سے زائد ترقیاتی سکیموں پر خرچ کر چکا ہے،آصف منہیس

لاہور(خبرنگار)محکمہ سپیشل ایجوکیشن پنجاب نے 2015-16 سالانہ ترقیاتی بجٹ 784 ملین کا 65 فیصد سے زائد جاری مختلف ترقیاتی سکیموں پر خرچ کر چکا ہے اور زیادہ تر ترقیاتی منصوبے تکمیل کے مراحل میں ہیں۔یہ بات صوبائی وزیر خصوصی تعلیم آصف سعید منہیس نے گزشتہ روز ڈائریکٹر آف سپیشل ایجوکیشن کی سالانہ ترقیاتی منصوبوں کی ری ویومیٹنگ میں کہی۔اس موقع پر ایڈیشنل سپیشل ایجوکیشن محمد الیاس ،ڈائریکٹر سپیشل ایجوکیشن فاضل چیمہ سمیت پنجاب کے تمام اضلاع کے ای ڈی اوز سپیشل ایجوکیشن موجود تھے۔آصف سعید منہیس نے بتایا کہ مختلف اضلاع میں سپیشل ایجوکیشن کے تحت جاری ترقیاتی سکیموں پر تیزی سے کام جاری ہے۔

اور انہیں جلد مکمل کر لیا جائے گا۔انہوں نے بتایا کہ کلورکوٹ ضلع بھکر میں 16.500 ملین کی لاگت سے گورنمنٹ سپیشل ایجوکیشن سنٹر تکمیل کے آخری مراحل میں ہے جبکہ 10.000 ملین کی لاگت سے خوشاب میں سماعت سے محروم بچوں کے لئے سکول کو مڈل سے سکینڈری میں اپ گریٹ کیا جارہا ہے۔بھکر میں 70.400 ملین کی لاگت گورنمنٹ سپیشل ایجوکیشن سنٹر کی عمارات تعمیر کی جارہی ہے جبکہ گورنمنٹ سپیشل ایجوکیشن سنٹر ممتاز آباد ضلع ملتان 71.914 ملین کی لاگت سے مکمل ہو چکی ہے جبکہ جلالپور پیروالاضلع ملتان میں 10.000ملین کی لاگت سے سپیشل ایجوکیشن سنٹر مڈل سے سکینڈری میں اپ گریڈ کیا گیا ہے۔آصف سعید منہیس نے کہا کہ ضلع وہاڑی کی تحصیل میلسی میں 49.895 ملین کی لاگت سے سپیشل ایجوکیشن سنٹر کی تعمیر پر بھی کام تیزی سے جاری ہے جبکہ سپیشل ایجوکیشن سنٹر ٹبہ سلطان میلسی کو 16,500 ملین لاگت سے مکمل کیا جارہا ہے۔ بہاولپور میں شاداب ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ برائے دماغی معذوراں کے لئے 98.316 ملین کی لاگت سے تعمیر کیا جارہا ہے جبکہ بہاولپور میں ہی فلو لرنرز کے لئے انسٹی ٹیوٹ کی بلڈنگ بھی آخری مراحل میں ہے۔انہوں نے کہ تمام ای ڈی اوز کو ہدایت کی کہ وہ تمام سنٹر کا باقاعدگی سے معائنہ کریں اور ہوسٹلوں میں معذور بچوں کے لئے کھانے کے انتظامات کو باقاعدگی سے مانیٹر کریں اور تمام سپیشل ایجوکیشن سنٹرز کی سکیورٹی کو یقینی بنائیں۔