چیئرمین ہائر ایجوکیشن کمیشن کا صحافیوں کے وفد کے ہمراہ گورنمنٹ کالج یونیورسٹی کا دورہ

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)چیئرمین ہائر ایجوکیشن کمیشن ڈاکٹر مختار احمد کی صحافیوں کے وفد کے ہمراہ گورنمنٹ کالج یونیورسٹی لاہور آمد۔ وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر حسن امیر شاہ سے ملاقات۔ یونیورسٹی کی تدریسی اور تحقیقی سرگرمیوں کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر حسن امیر شاہ کا کہنا تھا کہ جی سی یونیورسٹی نے ہمیشہ تدریس کے ساتھ طلباء کی تربیت پر بھی بھر وپرتوجہ دی ہے۔ جگہ کی کمی کی وجہ سے جی سی یونیورسٹی کو نئے پروگرام شروع کرنے میں مسائل رہے۔ نئے کیمپس پر ترقیاتی کام جاری ہے۔ چیئرمین ہائر ایجوکیشن کا کہنا ہے کہ جی سی یونیورسٹی پاکستان کا فخر ہے، جس نے ملک کو بہت سے نامور ادیب اور سائنسدان دیئے۔اس درسگاہ کی ترقی کے لئے ہر طرح کا تعاون فراہم کر رہے ہیں۔

ڈاکٹر مختار کا کہنا تھا کہ اس وقت ملک کو 36ہزار PHDs کی کمی کا سامنا ہے ، وفاقی اور صوبائی حکومتوں کو مل کر ہائر ایجوکیشن کے لے کام کرنا ہوگا۔ وفاقی اور صوبائی ہائر ایجوکیشن کمیشن کا کوئی تنازع نہیں۔18ویں ترمیم کے بعد صوبائی ہائر ایجوکیشن کمیشن بھی حقیقت ہیں ، صرف رول واضح کرنے کی ضرورت ہے اور یہ معاملہ بھی قونصل آف کامن انڑسٹ میں حل ہو جائیگا۔انہوں نے ہائرایجوکیشن کمیشن کے بجٹ کو بڑھائے جانے پر بھی ذور دیا۔ مردان واقعہ کے حوالے سے بات کرتے ہوے ڈاکٹر مختار کاکہنا تھا کہ تعلیمی اداروں اور طلباء میں عدم برداشت کا مسئلے کو بہت سنجیدگی سے دیکھ رہے ہیں اوراس حوالے سے اگلے ماہ وائس چانسلرز کانفرنس کا بھی انعقاد کر رہے ہیں، جی سی یو طلباء کی تربیت اور ان برداشت میں فروغ کے حوالے سے مثالی درسگاہ ہے۔ اس حوالے سے وائس چانسلرپروفیسر ڈاکٹر حسن امیر شاہ کاکہنا تھا کہ طلباء کی تربیت کاعمل سکول سے شروع ہوتا ہے ہمیں اس حوالے سے سکولوں پر بھی توجہ دینے کی ضرورت ہے۔