گرمی بڑھتے ہی ، ٹھنڈے مشروبات کا استعمال بڑھ گیا ، جگہ جگہ ٹھیلے سج گئے

لاہور (عامر بٹ سے) ماہ مئی میں میں آگ برساتے سورج نے لوگوں کو گھروں میں محدود کر دیا ،شدید گرمی میں جسم کی حدت کو نارمل رکھنے کے لئے ٹھنڈے اور دیسی مشروبات کے استعمال میں اضافہ ہو گیا ،گلی محلوں ،کالج ،یونیورسٹیوں اور بازاروں میں ہر طرف مشروبات کی دکانیں ،ریڑھیاں اور ٹھیلے نظر آنے لگے ،دیسی اجزا ء سے تیار کر دہ شربت صندل ،بزوری ،بادام کا شربت ،آلو بخارے کا شربت ،بھنے ہوئے آٹے اور شکر سے تیار کردہ ''ستو''، بادام ،چہار مغزاور دودھ سے تیار کردہ سپیشل پہلوانی سردائی ،لیموں کے عرق اور نمک کی آمیزش سے تیار کردہ لیموں پانی ،کیلے اور سٹرابری کا ملک شیک گرمی کی شدت کو کم کرنے کے لئے بہترین مشروب اور ہر فرد کی ضرورت بن گئے ، ٹھنڈے اثرات کے حامل گوند کتیرا، تخم ملنگا چھلکا،الائچی ،بادام دیسی مشروبات کے اہم اجزاؤ ں میں شامل برف کو باریک پیس کر بنائے گئے گولوں،مختلف رنگوں اور ذائقوں پر مشتمل قلفیاں بچوں کے ساتھ ہر عمر کے افراد بھی استعمال کرنے میں پیش پیش ،تفصیلات کے مطابق مئی 2017کے وسط سے پہلے ہی آگ برساتے سورج نے لوگوں کو گھروں میں مقید کر دیا ہے گزشتہ چند دنوں میں پڑنے والی شدید گرمی نے جہاں مجموعی طور پر درجہ حرار ت کو زیادہ کر دیا ہے وہاں انسانی جسم کے درجہ حرارت میں بھی اضافہ کر دیا ہے ،ماہ مئی اور جون میں حبس اور گرمی میں جسم کی حدت کو نارمل اور لیول پر رکھنے کے لئے چھوٹے بچوں سے لے کر جوان ،بوڑھے اور خواتین نے بھی ٹھنڈے اور دیسی مشروبات کے استعمال میں اضافہ ہو گیا کر دیا ہے تاکہ جسم کے اندر پانی کی کمی کے ساتھ جسم کے اندرونی حرارت کو بھی برقرار رکھا جاسکے ،اس وقت سندھ اور پنجاب کے وسطی علاقوں کے شہروں ،گاؤں ،گلی محلوں ،کالج ،یونیورسٹیوں اور لوگوں کی ؂زیادہ آمدورفت والے بازاروں میں ہر طرف مشروبات کی دوکانیں ،ریڑھیاں اور ٹھیلے نظر آنے لگے ہیں جہاں لوگ دھڑا دھڑ اپنی پیاس بجھانے کے لئے ان مشروبات کا استعمال کر رہے ہیں اس وقت فی زمانہ جو شربت لوگ زیادہ استعمال کررہے ہیں ان میں دیسی اجزا ء سے تیار کر دہ شربت صندل ، ٹھنڈے اثرات کا حامل شربت بزوری ، جسم کو طاقت پہنچانے کے لئے بادام کا شربت ،جگر اور معدہ کے لئے انتہائی مفید آلو بخارے کا شربت ، بھنے ہوئے آٹے اور شکر کے آمیزہ کو مکس کرکے تیار کردہ ''ستو'' ، بادام ،چہار مغزاور دودھ سے تیار کردہ سپیشل پہلوانی ٹھنڈی سردائی ، جسم میں نمکیات اور وٹامن سی کی کمی کو پورا کرنے کے لئے لیموں کے عرق اور نمک کی آمیزش سے تیار کردہ لیموں پانی ،اس کے علاوہ کیلے اور سٹرابری کا ملک شیک گرمی کی شدت کو کم کرنے کے لئے بہترین مشروب اور ہر فرد کی ضرورت بن گئے ہیں، اس وقت دیسی مشروبات میں جو اجزا زیادہ استعمال کئے جارہے ہیں وہ بلا شبہ انسانی جسم کی حدت کو کم کرنے کے لئے لا جواب ہیں جن میں گوند کتیرا، تخم ملنگا چھلکا،الائچی اوربادام شامل ہیں جن کو اکٹھے ایک خاص طریقہ سے گرائنڈ اور مکس کرکے پیش کیا جاتا ہے جس کو پینے کو بعد ایک فرحت اور سکون کا احساس ہو تا ہے ،ہر گرمی کے آغاز سے اختتام تک جو چیز کم از کم بچوں کی پسند ہے وہ برف کو باریک پیس کر بنائے گئے گولوں،مختلف رنگوں اور ذائقوں پر مشتمل قلفیاں ہیں یہ برف کے گولے اور قلفیاں بچوں کے ساتھ ہر عمر کے افراد بھی استعمال کرنے میں پیش پیش ہیں۔