Daily Pakistan

معروف شاعرفرحت عباس شاہ کا یومِ ولادت(15نومبر)

اُداس شامیں، اُجاڑ رستے کبھی بلائیں تو لوٹ آنا| فرحت عباس شاہ |

وہ مجھے لاکھوں میں پہچانتا ہے| فرحت عباس شاہ |

خوشبو سا بدن یاد نہ سانسو کی ہوا یاد| فرحت عباس شاہ |

سوچتے رہنے کی عادت ہو گئی| فرحت عباس شاہ |

کوئی تو تھا کہ جو دیتا تھا دُعا شام کے بعد| فرحت عباس شاہ |

روز ہوں گی ملاقاتیں اے دل

آگ سی لگ گئی ہے پانی میں

تو کسی روز مرے گھر میں اُتر شام کے بعد

دل بہت بے قر ار رہتا ہے

بدل گئے میرے موسم تو یار اب آئے

بھول ہی جائیں گے ہم ظاہر ہے

تمہارا پیار چھپ چھپ کر کئی چہرے بدلتا ہے مُجھے تم یاد آتے ہو

سخی تو ہے ہی شجاعت میں بھی غضب کا ہے

ہوں دل گرفتہ ، اسیر ِ ملال ہوں اور ہوں

تمہارا درد کئی کام لے گیا مجھ سے| فرحت عباس شاہ |

مزیدخبریں

نیوزلیٹر





اہم خبریں
Test List