چاول برآمد کنندگان نے کنٹینرریلیز کرنے کیلئے وزیر اعظم سے مدد مانگ لی

چاول برآمد کنندگان نے کنٹینرریلیز کرنے کیلئے وزیر اعظم سے مدد مانگ لی

کراچی (اکنامک رپورٹر)چاول کے برآمد کنندگان نے کینیا میں پھنسے ہوئے کنٹینرز کی ریلیز کیلئے وزیر اعظم پاکستان عمران خان سے مدد طلب کر لی ہے ۔ وزیر اعظم پاکستان کو لکھے گئے ایک خط میں رائس ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن نے توجہ کینیا میں ڈیڑھ ماہ سے پھنسے ہوئے چاول کے کنٹینرز کی جانب کروائی اور ان چاول کے کنٹینرز کی جلد از جلد ریلیز کے حکومتی سطح پر اقدامات کرنے کی درخواست کی ہے ۔کینیا کے کسٹم حکام نے گذشتہ ماہ سے امپورٹ پالیسی میں اچانک تبدیلی کرتے ہوئے چاول کیدرامدی کنٹینرز کی اگزامینشن کا فیصلہ کیا جس کے باعث پاکستان سے برآمد کئے جانے والے سے زائد چاول کے کنٹینر کینیا کی بندرگاہ ممباسا پر پھنسے ہوئے ہیں ۔ کینیا کے حکام کے پاس ایگزیمینیشن کی سہولیات بھی ناپید ہیں جس کی وجہ سے تاخیر ہو رہی ہے اور کنٹینرز پر ڈیمرج لگ رہا ہے۔

خط میں مزید لکھا گیا ہے کہ یہ چاول کینیا کی جانب سے نامزد کردہ ایجنسیوں کی جانب سے سرٹیفیکیٹ جاری ہونے بعد برآمد کئے گئے تھے مگر ایک بار پھر فیصد ایگزیمینیشن کی شرط عائد کر کے چاول روک لئے گئے ہیں ۔ کینیا کے کسٹم حکام کا کہنا ہے برآمد کیے گئے چاول میں بروکن کی شرح زائد ہے۔خط میں بتایا گیا ہے کہ کینیا میں پاکستانی کمرشل کونسلر زاہد قدیر مسلسل کوششوں میں مصروف ہیں مگر تا حال یہ مسئلہ حل نہ ہوسکا ۔

مزید : علاقائی