محکمہ ایکسائز نے اڑھائی ارب بٹورلئے، شہریوں کو کمپیوٹر ائزڈ نمبر پلیٹس ملیں نہ سمارٹ کارڈ

محکمہ ایکسائز نے اڑھائی ارب بٹورلئے، شہریوں کو کمپیوٹر ائزڈ نمبر پلیٹس ملیں ...

  

 لاہور(ارشدمحمود گھمن،سپیشل رپورٹر) نئی خاتون ڈی جی ایکسائز صالحہ سعید کی تعیناتی سے بھی20لاکھ کمپیوٹرائزڈ نمبر پلیٹس اور سمارٹ کارڈ کے حصول کاخواب شرمندہ تعبیر نہ ہوسکا۔ تفصیلات کے مطابق سابق سیکرٹری و ڈی جی کی عدم توجہی اور ناقص حکمت عملی کے سبب پنجاب بھر میں نیو گاڑیوں کی رجسٹریشن کی 20لاکھ کمپیوٹر نمبر پلیٹس سے گاڑی مالکان محروم رہے جبکہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن موٹر رجسٹریشن نے ایک سال میں 2ارب50کروڑ روپے ایڈوانس نمبر پلیٹس کی مد میں شہریوں سے بٹورلئے۔متاثرین گاڑی مالکان اصغر علی،محمد شہباز، نصراللہ،صفدر، غلام حسین،غلام رسول،رقیہ نازاور ثریا بی بی نے کہاہے کہ محکمہ فی کس کمپیوٹرائزڈ نمبر پلیٹس کے تاحال1250 روپے وصول کررہاہے۔ کمپیوٹرائزڈ نمبر پلیٹس اور سمارٹ کارڈ حاصل کرنے کے لئے دفاتر کے چکر لگا تے ہیں لیکن افسران مختلف حیلوں بہانوں سے نئی تاریخ دے دیتے ہیں۔ کئی مہینوں سے دھکے کھارہے ہیں لیکن کوئی شنوائی نہیں ہوتی۔ گاڑی کی کمپیوٹر نمبر پلیٹ نہ ہونے کی وجہ سے پنجاب پولیس،ٹریفک وارڈنز اورمحکمہ ایکسائز کاعملہ بلاوجہ بہانے بنا کر تنگ کرکے پیسے بٹورتا ہے۔رابطے پر ڈی جی ایکسائز صالحہ سعید نے کہا کہ بہت سے مسائل تھے جنہیں حل کرنے کی کوشش کی اور ان میں سے بہت سے کئے بھی ہیں تاہم کمپیوٹرائزڈ نمبر پلیٹس اور سمارٹ کارڈ کامسئلہ بھی جلد حل ہوجائے گا۔

محکمہ ایکسائز

مزید :

صفحہ آخر -