شانگلہ میں یوٹیلٹی سٹورز غیر فعال، ملازمین کا احتجاج 

  شانگلہ میں یوٹیلٹی سٹورز غیر فعال، ملازمین کا احتجاج 

  

  الپوری(ڈسٹرکٹ رپورٹر)شانگلہ کے یوٹیلٹی سٹورزغیرفعال اب ملازمین کا احتجاج۔ یوٹیلٹی سٹورز پیکج۔؟ ملازمین بھی سراپا احتجاج بن گئی۔ پیکج شانگلہ کے کئی سٹوروں میں ناپید ہے۔ ملازمین کے احتجاج کے پہلے ہی یوٹلیٹی سٹوربدحالی کا شکار ہے ان سٹوروں میں بنیادی ضروری اشیاء خوردنی نایاب،سٹورز میں آٹا،چینی، گھی دالیں،چائے،مصالحہ جات،نمک،،ماچس اور صابن تک دستیاب نہیں،علاقے کے عوام سارا دن سٹور کا چکر لگاکر مایوس گھروں کو لوٹتے ہیں۔برائے نام سٹور ہیں سٹور کیپر اور گاہک کے درمیان سارا دن تلخ کلامی اورجھگڑے معمول بن گیا ہے۔ اب ملازمین کے احتجاج سے سٹور بند پڑے ہیں۔ یوٹیلٹی سٹور ملازمین کی احتجاج سے پہلے بھی شانگلہ کے علاقے لیلونئی،الپوری،بیلے بابا،کوٹکے،پورن،چکیسر،شاہ پور کے مقامات پر یوٹیلٹی سٹورز موجود ہیں۔علاقہ دور افتادہ اور پسماندہ ہونے کی وجہ سے غربت بہت زیادہ ہے۔یوٹیلٹی سٹور کے نیٹ ورک سے غائب ہے غریب عوام کیلئے یوٹیلٹی سٹورز پیکج۔ دال،چینی،گھی،آٹا کی نرخ میں کئی فیصد تک کمی کیگئی ہے لیکن یوٹیلٹی سٹورز میں اشیاء خوردنی دستیاب نہیں ہیں اور اب ملازمین کی احتجاج نے یوٹیلیٹی سٹوروں بند پڑے ہیں۔ پہلے ہی سے شانگلہ کے یوٹیلٹی سٹورز برائے نام ہے عوام نے یوٹیلٹی سٹورز کے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ شانگلہ کے یوٹیلٹی سٹوروں کو اشاء خوردنی کی سپلائی کیلئے ٹھوس اقدامات اٹھائیں اور ملازمین کے جائز مطالبات حل کرنے کیلئے ٹھوس اقدامات اٹھایا جائے۔۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -