شام سے امریکی فوج کے انخلا میں چار ماہ لگ سکتے ہیں، ٹرمپ

شام سے امریکی فوج کے انخلا میں چار ماہ لگ سکتے ہیں، ٹرمپ

واشنگٹن (این این آئی)امریکا کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے سابقہ فیصلے کو تبدیل کرتے ہوئے شام سے آئندہ 4 ماہ میں امریکی افواج کے انخلا پر رضامندی ظاہر کردی ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ٹرمپ نے 19دسمبر کو شام سے امریکی فوج کے ایک ماہ میں انخلا کا غیرمتوقع طور پر(بقیہ نمبر15صفحہ12پر )

اعلان کرتے ہوئے امریکا سمیت دنیا بھر کو حیران کردیا تھا۔تاہم بعد میں انہوں نے اپنے سابقہ بیان کے برعکس ٹوئٹ کی کہ ہم شام سے آہستہ آہستہ اپنی فوج گھر واپس بلائیں گے۔تاہم اب امریکی اخبار نے انکشاف کیا کہ ٹرمپ نے ایک نجی ملاقات میں امریکی فوج کے شام اور عراق میں کمانڈر پال جے لا کمیرا سے کہا کہ شام میں موجود تقریباً 2ہزار فوجیوں کے انخلا میں کئی ماہ لگ سکتے ہیں۔اخبار نے فوجی حخام سے درخواست کی کہ وہ امریکی فوج کے انخلا کا صحیح دورانیہ بتائیں لیکن انہوں نے اس درخواست کو مسترد کردیا اور اس کی وجہ سیکیورٹی وجوہات کے ساتھ ساتھ یہ خدشہ بھی ہے کہ کہیں آخری موقع پر ٹرمپ اپنا فیصلہ نہ بدل لیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر