دکانداروں نے ٹافیاں چوری کرنے کا الزام لگا کر 4بچوں پر وحشیانہ تشددکر کے چنگیز خان کی روح کو شرما دیا

دکانداروں نے ٹافیاں چوری کرنے کا الزام لگا کر 4بچوں پر وحشیانہ تشددکر کے ...
دکانداروں نے ٹافیاں چوری کرنے کا الزام لگا کر 4بچوں پر وحشیانہ تشددکر کے چنگیز خان کی روح کو شرما دیا

  


شیخوپورہ(ڈیلی پاکستان آن لائن) نارنگ منڈی میں دکانداروں نے اپنی عدالت لگالی، بچوں پر ٹافیاں چوری کرنے کا الزام لگا کر وحشیانہ تشدد، رسیوں سے جکڑ کر سر مونڈھ دئیے، منہ کالے کرکے بازار کا چکر بھی لگوایااور زخمی ہونے پر پھینک دیا۔

نجی نیوز چینل کے مطابق شیخوپورہ کے علاقہ نارنگ منڈی میں ریل بازار کے بااثر دکانداروں نے چار معصوم بچوں کو دکان سے ٹافیاں اور پیسے چوری کرنے کے شبہ میں پکڑا اور ایک گھنٹے تک بھرے بازار میں ہاتھ باندھ کر وحشیانہ تشدد کا نشانہ بناتے رہے۔

لوگوں نے ان وحشی درندوں کو روکنے کی کوشش کی لیکن ان کو رحم نہ آیا۔ جب دکانداروں کا تشدد سے بھی دل نہ بھرا تو پھر ان کے سر مونڈ ڈالے۔بچوں کے منہ کالے کرکے بازار کا چکر لگوایا۔ بچوں کی حالت غیر ہونے پر بھرے بازار میں انھیں پھینک دیا۔ راہگیروں نے بچوں پر ترس کاکھا کر ان کوزخمی حالت میں نجی ہسپتال پہنچایا جہاں ان کو طبی امداد دی گئی ۔میڈیا پر خبر نشر ہونے کے بعد وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے واقعہ کا نوٹس لیکر ڈی پی او شیخوپورہ سے رپورٹ طلب کرلی جس پر ڈی پی او نے ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے گرفتار ی کاحکم دیدیا، پولیس نے اب تک دوملزمان کوگرفتار کرلیا ہے ۔

مزید : قومی /جرم و انصاف


loading...