نیپرا کا بجلی کے ملک گیر بلیک آؤ ٹ کا نوٹس، تحقیقات کا فیصلہ، لاہور میں بجلی کا ترسیلی نظام معمول پرنہ آسکا 

نیپرا کا بجلی کے ملک گیر بلیک آؤ ٹ کا نوٹس، تحقیقات کا فیصلہ، لاہور میں بجلی ...

  

 اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا) نے بجلی کے ملک گیر بلیک آوٹ کا نوٹس لے لیا۔نیپرا کی جانب سے جاری اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ بجلی کے ملک گیر بلیک آوٹ کی تحقیقات کا فیصلہ کیا گیا ہے جس کے لیے اعلٰی اختیاراتی کمیٹی بنائی جائیگی۔نیپرا اعلامیے کے مطابق تحقیقاتی کمیٹی میں نیپرا اور نجی شعبے کے ماہرین شامل ہوں گے اور کمیٹی بجلی کے حالیہ ملک گیر بلیک آؤ ٹ کی وجوہات اور حقائق کا جائزہ لے گی جب کہ کمیٹی مستقبل میں ایسے واقعات کی روک تھام کے لیے سفارشات بھی دے گی۔دوسری طرف لاہور میں بریک ڈاون کے آفٹر شاکس کا سلسلہ جاری جاری ہے، لاہور میں دو روز بعد بھی بجلی کا ترسیلی نظام معمول پر نہ آسکا، لیسکو کے 320 سے زائد فیڈرز سے بجلی بند ہے۔لیسکو کو تاحال ڈیمانڈ کے مطابق بجلی مہیا نہ کی جاسکی۔ شہر کے مختلف علاقوں میں بجلی کی جبری لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ گلشن راوی، سمن آباد، راج گڑھ، مغل پورہ، شالا مار، مزنگ، عابد مارکیٹ، شاد باغ، بادامی باغ، شاہدرہ، کریم پارک، بیگم کوٹ، کوٹ محمدی، بلال گنج، شیرانوالہ، بھاٹی گیٹ، شاہ عالم مارکیٹ، گرین ٹاون، بھٹہ چوک، علی پارک، آر اے بازار، گلستان پارک، نشاط کالونی میں بجلی بند ہے۔قلعہ گجر سنگھ، گڑھی شاہو، دھرم پورہ، صدر، گلبرگ، علامہ اقبال ٹاون میں بھی بجلی بند ہے۔ ذرائع کے مطابق لیسکو کو بلاتعطل بجلی فراہمی کیلئے 2200 میگاواٹ بجلی کی ضرورت ہے، این پی سی سی کی جانب سے لیسکو کو 1200 میگاواٹ بجلی فراہم کی جارہی ہے، لیسکو کو 1000 میگاواٹ شارٹ فال کا سامنا ہے۔

بلیک ڈاؤن

مزید :

صفحہ اول -