معاشی بہتری کے لئے حسد نہیں، عقل کی ضرورت ہوتی ہے‘ حمزہ شہباز

    معاشی بہتری کے لئے حسد نہیں، عقل کی ضرورت ہوتی ہے‘ حمزہ شہباز

  



لاہور( لیڈی رپورٹر،این این آئی)پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز شریف نے کہا ہے کہ معیشت میں بہتری کے لئے حسد اور بغض کی نہیں بلکہ عقل اوروژن کی ضرورت ہوتی اور موجودہ حکومت اس سے عاری ہے،احتساب کے نام پر تماشہ ہورہاہے، احتساب نہیں انتقام اور تماشہ کیاجارہاہے،احتساب کے حق میں ہیں لیکن احتساب کے نام پر انتقام برداشت نہیں، کرونا وائرس عالمی وبا ء ہے، ورلڈ ہیلتھ آ رگنائزیشن نے بھی کہہ دیا یے کہ یہ تیزی سے پھیلنے والا مرض ہے اللہ تعالی قوم کی حفاظت فرمائے،امید ہے کہ حکومت ڈینگی کی طرح کورونا وائرس کے معاملے پر ہوش کے ناخن لے گی،اللہ تعالی پاکستان کو کرونا وائرس سے محفوظ رکھے۔ احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز نے کہا کہ پاکستان کی 71سالہ تاریخ میں ایسے معاشی چیلنجز کا کبھی سامنا نہیں رہا، جب ملک کی معیشت خراب ہو تو دشمن کو سازش نہیں کرنی پڑتی،ڈالر اوپر جارہا ہے اور سٹاک مارکیٹ بھی گراوٹ کا شکار ہے، حکومت کا خانہ عقل سے خالی ہے،معیشت کے لیے عقل اور وژن کی ضرورت ہے۔۔انہوں نے کہا کہ ای سی ایل میں نام نہ ہونے کے باوجود میرے ساتھ ائیر پورٹ پر دہشتگرد اور تخریب کار جیسا سلوک کیاگیا،حکومت اپنے آپ کو بے نقاب کررہی ہے،نیازی صاحب بات کرنے سے پہلے سوچ لیں،قوم روز دیکھتی ہے،کسی کو کیس بننے سے پہلے دوسرے کیس میں اندر کردیتے ہیں،ریفرنس فائل نہ ہونے پرکھلا چھوڑا جاتاہے۔انہوں نے کہا کہ نیب کے قانون میں ترمیم ہونی چاہیے،ہم احتساب کے حق میں ہیں لیکن نیازی صاحب احتساب کے نام پر انتقام لے رہے ہیں،حکمراان عوام کے مسائل حل کریں وگرنہ قوم سے معافی مانگ کر واپس چلے جائیں۔

حمزہ شہباز

مزید : صفحہ اول