اسلام عدل و انصاف اور انسانیت کی فلاح و ہدایت کا دین،دہشت گردی اور انتہا پسندی کا اسلام سے کوئی تعلق نہیں:امام کعبہ الشیخ عبدالرحمن السدیس

اسلام عدل و انصاف اور انسانیت کی فلاح و ہدایت کا دین،دہشت گردی اور انتہا ...
اسلام عدل و انصاف اور انسانیت کی فلاح و ہدایت کا دین،دہشت گردی اور انتہا پسندی کا اسلام سے کوئی تعلق نہیں:امام کعبہ الشیخ عبدالرحمن السدیس

  



مکۃ المکرمہ(ڈیلی پاکستان آن لائن)امام کعبہ الشیخ ڈاکٹر عبدالرحمن السدیس نے کہا ہے کہ اسلام عدل و انصاف اور انسانیت کی فلاح و ہدایت کا دین ہے، دہشت گردی اور انتہا پسندی کا اسلام سے کوئی تعلق نہیں، سعودی عرب کی قیادت نے ملت اسلامیہ کے اتحاد، تعمیر وترقی کے لئے تاریخی اور مثالی حل پیش کئے ہیں، جن پر عمل کرتے ہوئے عالم اسلام متحد ہوسکتا ہے.

تفصیلات کے مطابق مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے امیر سینیٹر علامہ ساجد میر نے امام کعبہ الشیخ ڈاکٹر عبدالرحمن السدیس سے وفد کے ہمراہ مکہ مکرمہ میں ملاقات کی،امام کعبہ سے ملاقات  کرنے والوں میں ڈاکٹر حافظ عبدالکریم،مولانا ابوتراب،علامہ ابتسام الہی ظہیر اورقاری صہیب میر محمدی بھی شامل تھے،ملاقات میں پاک سعودیہ تعلقات سمیت دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔اس موقع پرامام کعبہ ڈاکٹر الشیخ عبدالرحمن السدیس کا کہنا تھا کہ  اسلام دشمن قوتیں فتنوں کے اس دور میں معصوم لوگوں کو گمراہ کرنے کے لئے جدید طریقے استعمال کررہی ہیں، معاشرے میں درست طریقے پروان چڑھانے کے لئے ہر اہل ایمان کو اپنا کردار ادا کرنا چاہیے تاکہ اغیار کی طرف سے پھیلائے جانے والے افکار کا خاتمہ کیا جاسکے اور معاشرے کو پاک کیا جاسکے۔ امام کعبہ نے مزید کہا کہ انتہا پسندی نے اسلام کے تشخص کو بہت نقصان پہنچایا،بہت سے گروہ اسلام کا نام بدنام کرنے کی کوششیں کر رہے ہیں،میڈ یا اسلامی تعلیمات اور اسلامی تشخص کو اجاگر کرنے میں اپنا کردار ادا کرے،سلطنت سعودیہ کاپیغام اسلام کاپیغام ہے جسکی بنیادتحمل،برداشت اورمیانہ روی پرہے،مقامات مقدسہ صرف عبادت کےلئےمختص ہے، یہاں کسی قسم کی سیاست، فرقہ واریت کی کوئی گنجائش نہیں ہے،اللہ تعالیٰ نے مملکت سعودی عرب کو حرمین شریفین کی خدمت اور حفاظت کے لئے مامور کیا ہے۔ انہوں نے قرآن وسنت کی نشرواشاعت کے لیے مرکزی جمعیت اہل حدیث کی کاوشوں کو سراہا۔

اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے پروفیسر ساجد میرنے کہا کہ پاکستانی عوام خادم حرمین شریفین سے والہانہ محبت رکھتے ہیں اور حرمین کے تحفظ کے لیے ہمیشہ دعا گو رہتے ہیں،حرمین کی حفاظت کے لیے ہر قسم کی قربانی دینے کا عزم رکھتے ہیں،مسلم اُمہ خصوصا پاکستان کے لیے سعودی خدمات کو ہم تحسین کی نگاہ سے دیکھتے ہیں،سعودی عرب عالم اسلام کی وحدت کا مرکز ہے،پاک سعودیہ تعلقات دن بدن مضبوط ہورہے ہیں۔

 

مزید : عرب دنیا