جندول‘ نوجوان کو قتل کر کے نعش کھیتوں میں پھینک دی گئی

جندول‘ نوجوان کو قتل کر کے نعش کھیتوں میں پھینک دی گئی

جندول(نمائندہ پاکستان)تھانہ ثمرباغ کے حدود گاوں درنگال مانئی سے تعلق رکھنے والے شخص کو نامعلوم افراد نے گلے میں پھندا ڈال کرقتل کر کے لاش تھانہ معیار کے حدود میں پھینک کر فرار ہو گئے، تھانہ معیار پولیس کے مطابق انہیں اطلاع ملی کہ کس معیار میں یوسف کے کھیتوں میں نامعلوم شخص کی لاش پڑی ہے پولیس نے موقع پر پہنچ کر لاش قبضہ میں لی اور جامہ تلاشی کے دوران اس کی جیب سے آٹھ سو نقد روپے قومی شناختی کارڈ اور تھانہ ثمرباغ کا پروانہ برآمد ہوا اور مقتول کی تصدیق حیات ولد بہادر ساکن مانئی درنگال کے نام سے ہو گئی ، پولیس کے مطابق مقتول کے خلاف اس کے بھائی حکومت خان نے تھانہ ثمرباغ میں رپورٹ درج کرائی تھی کہ مقتول حیات نے اس کے گھر میں داخل ہوکر اسے اور اس کے بیٹے کو قتل کرنے کی دھمکی دی جس کے بعد پولیس نے مقتول حیات کے خلاف مقدمہ درج کرایا تھا ، مقتول کے دوسرے بھائی ایوب نے پولیس کو تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ مقتول نے اپنی بیوی کو فون کر کے بتایا تھا کہ اس کے ساتھ دو مہمان ہیں اور وہ کھانا کھانے گھر آ رہے ہیں روٹی تیار کر لو مگر وہ نہ آئے اور دوسرے روز جب وہ پولیس سٹیشن مقتول کے غائب ہونے کے حوالہ سے ایف آئی آر درج کرانے آئے تو انہیں پتہ چلا کہ حیات کو قتل کر دیا گیا ہے ، پولیس کے مطابق انہوں نے مقتول کے بھائی ایوب کے مدعیت میں ایف آئی آر درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے اور بہت جلد قاتل پولیس کے شکنجے میں ہونگے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...