فوج کے ہسپتال عوام کیلئے کھولے جائیں،جسٹس قاضی فائز عیسیٰ

 فوج کے ہسپتال عوام کیلئے کھولے جائیں،جسٹس قاضی فائز عیسیٰ

  

 اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) سپریم کورٹ کے فاضل جج جسٹس قاضی فائز عیسی نے کہا ہے کہ زندگی سب کا بنیادی حق اور صحت اس کا اہم ترین حصہ ہے، کورونا کے باعث ملک کے تمام سرکاری اور افواج پاکستان کے ہسپتال عوام کے لئے فوری کھولے جائیں۔ تفصیلات کے مطابق کورونا کا شکار جسٹس قاضی فائز عیسی نے ہسپتال سے اپنے پیغام میں کہا ہے کہ مجھے اور میری اہلیہ کو کورونا ویکسین مکمل لگ چکی ہے، تمام احتیاط کے باوجود ہم دونوں ڈیلٹا ویرینٹ کا شکار ہوئے، وبا کے دوران احتیاط کے حوالے سے اسلامی احکامات واضح ہیں، بدقسمتی سے سماجی فاصلے کی پابندی پر عملدرآمد نہیں ہو رہا، عید الاضحی کی نماز کے دوران بھی ایس او پیز کی خلاف ورزی ہوئی، فیصل مسجد میں لوگوں نے کندھے سے کندھا ملا کر نماز ادا کی۔ جسٹس قاضی فائز عیسی نے کہا کہ زندگی سب کا بنیادی حق اور صحت اس کا اہم ترین حصہ ہے، آئین کا آرٹیکل 9زندگی کے تحفظ کا ضامن ہے، وبا سے نمٹنا ہماری مشترکہ قومی ذمہ داری ہے، کورونا کے دوران حالات کسی جنگ سے کم نہیں، تمام سرکاری اور افواج پاکستان کے ہسپتال عوام کے لئے فوری کھولے جائیں، طبقاتی تفریق کہیں عوام کے جانی نقصان کا باعث نہ بن جائے، ٹی وی اور ریڈیو پر کورونا ماہرین سے عوام کو آگاہی دی جائے۔

جسٹس قاضی فائز عیسیٰ

مزید :

صفحہ آخر -