عالمی ایجنسی اسٹینڈ رڈ اینڈ پوروز نے بھی پاکستانی معیشت کو مستحکم قرار  دے دیا 

  عالمی ایجنسی اسٹینڈ رڈ اینڈ پوروز نے بھی پاکستانی معیشت کو مستحکم قرار  دے ...

  

 اسلام آباد(آن لائن)موڈیز اور فچ کے بعد عالمی ایجنسی اسٹینڈرڈاینڈ پوورز نے بھی پاکستانی معیشت کو مستحکم قرار دے دیا  ایس اینڈ پی نے پاکستان کی طویل مدتی کریڈٹ ریٹنگ منفی بی اور قلیل مدتی ریٹنگ بی رہنے کی تصدیق کی ہے، پاکستان کی کریڈٹ میٹرکس3 سال تک دباؤ میں رہے گی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق عالمی اداروں نے پاکستان کی معیشت کو مستحکم قرار دینا شروع کردیا ہے جو کہ پاکستان میں سرمایہ کاری اور کاروباری سرگرمیوں اور حکومت کیلئے انتہائی اچھی خبر ہے  عالمی ایجنسی اسٹینڈرڈاینڈ پوورز کا کہنا ہے کہ پاکستان کا ریٹنگ آٹ لک مستحکم ہے  ایس اینڈ پی نے پاکستان کی طویل مدتی کریڈٹ ریٹنگ منفی بی اور قلیل مدتی ریٹنگ بی رہنے کی تصدیق بھی کی ہے ان کا کہنا ہے کہ کورونا وبا کے باعث پاکستانی معیشت متاثر ہوئی جس کے باعث پاکستان کی کریڈٹ میٹرکس اگلے 2 سے 3سال تک دبا ؤمیں رہے گی اس سے قبل موڈیز اور فیچ نے بھی پاکستانی معیشت کو مستحکم قرار دیا ہے  ترجمان وزارت خزانہ نے بتایا کہ فیچ ریٹنگز نے پاکستان کی اقتصادی ریٹنگ بی مائنس برقرار رکھی ہے موڈیز کی طرح پاکستان کی معیشت کو مستحکم آٹ لک قراردیا گیا ہے ترجمان وزارت خزانہ نے کہا کہ عالمی اداروں کا پاکستان کی اقتصادی پالیسیوں پر اعتماد بڑھ رہا ہے۔ کورونا کے باوجود پاکستان کی معیشت بہتر ہو رہی ہے۔ مزید برآں عالمی جریدے خلیج ٹائمز نے اپنی رپورٹ میں معاشی محاذ پر پاکستان کے مستقبل کو روشن قرار دیتے ہوئے لکھا کہ پاکستان میں بیرونی سرمایہ کاری سے معاشی استحکام آئے گا پاکستان کے معاشی اعشاریوں میں مسلسل نمایاں بہتری کا سلسلہ جاری ہے۔

عالمی ایجنسی رپورٹ

مزید :

صفحہ آخر -