حکمران پیسوں کا حساب دیں ،پی ٹی آئی کی دعوت پر دھرنے میں شرکت کا سوچ سکتے ہیں :جماعت اسلامی

حکمران پیسوں کا حساب دیں ،پی ٹی آئی کی دعوت پر دھرنے میں شرکت کا سوچ سکتے ہیں ...

لاہور(خبر نگا رخصوصی) امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ قو م کو بتایا جائے کہ اب تک کتنا قرض لیا اور کہاں کہاں خرچ کیا،اگرپی ٹی آئی نے دونومبرکے دھرنامیں شرکت کی دعوت دی توسوچ سکتے ہیں۔قوم کو آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک کی غلامی کی ہتھکڑیاں پہنانے والے وزیر خزانہ چاہتے ہیں کہ انہیں تمغہ حسن کارکردگی دیا جائے ۔ڈرگ مافیا،شوگر مافیا اور بڑے بڑے سمگلروں نے سیاسی پارٹیوں میں پناہ لے رکھی ہے لیکن نام نہاد سیاسی جماعتیں اپنی بادشاہت قائم رکھنے کیلئے مجرموں کے ہاتھوں میں کھیل رہی ہیں ۔کوئٹہ میں ابھی پہلے سانحہ کا غم تازہ تھا کہ دوسرا سانحہ ہوگیا جس پر پوری قوم غمزدہ ہے، پے درپے دہشت گردی کے واقعات سے ثابت ہوگیا ہے کہ حکمران عوام کو جان و مال کا تحفظ نہیں کرسکتے ،عوام کی نیندیں اڑ گئی ہیں اور حکمران اپنی اور اپنی اولادوں کی سیکورٹی پر قومی خزانے سے سالانہ اربوں روپے خرچ کرتے ہیں ۔ہم قوم کو ایسے حکمران دینا چاہتے ہیں جن کی موجودگی میں عوام سکھ کا سانس لے سکیں اور چین کی نیند سو سکیں۔جماعت اسلامی پنجاب کا اجتماع ارکان اور 30اکتوبر کو کرپشن مٹاؤ پاکستان بچاؤ مارچ ملک و قوم کی آئندہ سمت متعین کرے گا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے وحدت روڈ گراؤنڈ میں پنجاب کے ارکان کی تیاریوں کے سلسلہ میں ہونے والے جائزہ اجلاس کے بعد امیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمد ،سیکرٹری اطلاعات امیر العظیم ،ذکر اللہ مجاہد اور انتظامی کمیٹیوں کے ناظمین کے ہمراہ میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ناظم اجتماع ذکر اللہ مجاہد نے اجتماع کی تیاریوں کے حوالہ سے تفصیلی رپورٹ پیش کی ۔سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ جماعت اسلامی لٹیروں سے قوم کو نجات دلانے کیلئے آخری حد تک جائے گی ہم قوم سے بھی اپیل کرتے ہیں کہ ان زہریلے سانپوں اور بچھوؤں کے چنگل سے نکلیں جن کی وجہ سے قوم کے 70سال ضائع ہوگئے ہیں اور ملک آگے جانے کی بجائے پیچھے جارہا ہے۔امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ اگر تحریک انصاف کی جانب سے 2 نومبر کے دھرنے میں شرکت کی دعوت آئی تو اس حوالے سے سوچا جاسکتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف نے پارٹی سطح پر دھرنا دینے کا فیصلہ کیا ہے جس کی ہمیں دعوت نہیں آئی۔ اگر پی ٹی آئی کی جانب سے دھرنے میں شرکت کی دعوت آئی تواس میں شرکت کا سوچا جا سکتا ہے۔ ہم کرپٹ لوگوں کے ہاتھوں میں ہتھکڑیاں اور انہیں جیل میں دیکھنا چاہتے ہیں، چاہے وہ حکمران ہوں یا پھر اپوزیشن ، دونوں کا احتساب ہونا چاہیے ۔انہوں نے کہا کہ ملک پر وہی لوگ مسلط ہیں جن سے آزادی حاصل کرنے کیلئے ہمارے بڑوں نے تاریخ انسانی کی عظیم ترین قربانیاں دیں اور انگریز کے خلاف جنگ آزادی لڑی تھی ۔اقتدار پر مسلط بدقماش اور کرپٹ مافیا کے بڑوں نے انگریز سے وفاداری اور قوم سے غداری کے عوض جاگیریں حاصل کیں ،آج ان کی اولاد ملک پر مسلط ہے جسے قومی دولت لوٹ کر اپنی جیبیں بھرنے کے علاوہ کوئی کام نہیں ۔سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ ہم ملک میں افراد کی بجائے آئین و قانون کی حکمرانی چاہتے ہیں ۔امیرجماعت اسلامی پنجاب میاں مقصوداحمدنے کہا کہ قوم چاہتی ہے کہ آزاد اور خود مختار کمیشن بنے جو لٹیروں کا احتساب کرے ،انہیں سزائیں دے اور قومی دولت لوٹنے والوں کے پاسپورٹ اور جائیدادیں ضبط کرکے انہیں اڈیالہ جیل میں بند کرے ۔

جماعت اسلامی

مزید : صفحہ اول