عراقی رضا کار فورس کو ایف 16طیاروں تک رسائی پر امریکہ کااظہار تشویش

عراقی رضا کار فورس کو ایف 16طیاروں تک رسائی پر امریکہ کااظہار تشویش

  



واشنگٹن (اے پی پی) ا مریکی جریدے نے عراقی رضاکار فورس الحشد الشعبی کی ایف۔16 جنگی طیارے تک رسائی پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔امریکی جریدے فارن پالیسی نے ایک امریکی عہدیدار کے حوالے سے لکھا کہ واشنگٹن کو اس بات کی شدید تشویش ہے کہ الحشد الشعبی جنگی طیارے ایف۔16 کی ٹکنالوجی نہ حاصل کر لے کیونکہ یہ جنگی طیارے عراق کی بلد چھاونی میں بغیر سکیورٹی کے ہیں۔ ممکن ہے کہ الحشد الشعبی کے اہلکار عراقی چھاونی بلد میں ایف۔16 جنگی طیاروں کی ٹکنالوجی حاصل کرنے کی کوشش کرے اور اس چیز نے واشنگٹن کو پریشان کر دیا ہے۔اس رپورٹ میں بتایا گیا کہ عراقی کی بلد چھاونی میں 34 ایف۔16 جنگی طیاروں پر مبنی اسکاڈرن ہے اور اس حفاظت اور سکیورٹی کی ذمہ داری اب صرف عراقی سکیورٹی فورس کی ہے۔ اس سے پہلے تک اسکاڈرن کی سیکیورٹی کی ذمہ داری امریکی فوجی اور لاکہیڈ مارٹن کمپنی کے اہلکاروں پر تھی لیکن اس چھاونی پر متعدد بار راکٹ حملوں کے بعد غیر ملکی سیکورٹی اہلکاروں نے 8 جنوری کو پوری طرح سے بلد چھاونی خالی کر دی ہے۔

امریکی جریدے فارین پالیسی نے اپنی رپورٹ میں لکھا کہ جب سے امریکی فوجیوں نے بلد چھاونی خالی کی ہے تب سے امریکی حکام کو تشویش ہے کہ الحشد الشعبی کہیں اس کی ٹکنالوجی اور پرزوں تک رسائی حاصل نہ کر لے۔

مزید : عالمی منظر