9سالہ لڑکے کو قتل کرنے والا 11سالہ ولیدصلح ہونے کی بنا پر بری

9سالہ لڑکے کو قتل کرنے والا 11سالہ ولیدصلح ہونے کی بنا پر بری

لاہور(نامہ نگار )سیشن عدالت نے چپس نہ دینے پر 9سالہ لڑکے علی سفیان کو قتل کرنے والے 11سالہ ولید عرف چاند کو صلح ہونے کی بنا پر بری کردیاہے۔ایڈیشنل سیشن جج غلام عباس سیال کی عدالت میں گرین ٹاؤن پولیس نے 11سالہ ولیدعرف چاند کے خلاف 9سالہ سفیان کوقتل کرنے کا چالان پیش کررکھا تھا۔عدالت میں چالان آنے پر فاضل جج نے ولید عرف چاند کو طلب کیا اس کے پیش ہونے پر مقتول علی سفیان کا والد بھی پیش ہوا عدالت میں فریقین نے بتایا کہ ان کے درمیان صلح صفائی ہو چکی ہے، اس پر عدالت نے بیانات قلمبند کرنے کے بعد ولید عرف چاند کو بری کردیاہے۔

ملزم کے بارے میں عدالت کو بتایا گیا کہ وقوعہ کے وقت ولید اپنے باپ کا ریوالور لے کر اسے باپ کو دکان پر دینے جا رہا تھا ،راستے میں مقتول علی سفیان چپس کھا رہا تھا کہ ولید عرف چاند نے اس سے چپس مانگی انکار پر اس نے ہاتھ میں پکڑے ریوالور سے علی سفیان کو گولی مار دی جس سے وہ موقع پر ہی دم توڑ گیا تھا۔

مزید : میٹروپولیٹن 4