ہر ادارہ اپنے فرائض ایمانداری سے انجام دے تو تمام مسائل حل ہو سکتے ہیں:چیف جسٹس بلوچستان ہائی کورٹ

  ہر ادارہ اپنے فرائض ایمانداری سے انجام دے تو تمام مسائل حل ہو سکتے ہیں:چیف ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


 ژوب(آن لائن)چیف جسٹس بلوچستان ہائی کورٹ جسٹس جمال خان مندوخیل نے کہا ہے کہ قانون پر عملداری سے تمام معاملات ٹھیک ہو سکتے ہیں عدلیہ عوام کو بروقت انصاف کی فراہمی کیلئے کوشاں ہے انصاف عدالت کیساتھ ساتھ ہمارے اپنے گھروں میں بھی ہونا چاہیے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ژوب میں نئے جوڈیشل کمپلیکس کے افتتاح کے موقع پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا تقریب سے جسٹس ہاشم کاکڑ جسٹس نعیم افغان جوڈیشل مجسٹریٹ بشیر احمد بازئی ڈسٹرکٹ بار کے صدر عبدالرحمن لوؤن نے بھی خطاب کیا انہوں نے کہا کہ انصاف کی بنیادی ذمہ داری حکومت کی ہوتی ہے جب لوگوں کیساتھ ناانصافی کی جاتی ہے تو وہ عدالت کا دروازہ کھٹکھٹا تے ہیں منتخب نمائندے اسمبلیوں میں قانون بنائے عدلیہ اس پر عمل درآمد کرے گی بد قسمتی سے عدالتوں میں اکثر مقدمات حکومت کے خلاف ہوتے ہیں لوگوں کے روز مرہ مسائل کا حل حکومت اور انتظامیہ کا کام ہے مگر عمل نہ ہونے کی صورت میں لوگ عدالت سے رجوع کرتے ہیں دراصل میں ہم فرائض کی انجام دہی میں غفلت کرتے ہیں اگر ہر ادارے کا اہلکار اپنے فرائض ایمانداری سے انجام دیں تو تمام تر مسائل حل بھی ہو سکتے ہیں۔چیف جسٹس نے وکلا چیمبر کے قیام اعلان بھی کیا اور تقریب میں موجود کلی شہاب زئی کے رہائشی نے وکلا چیمبر کی تعمیر کیلئے اراضی کی فراہمی کا موقع پر اعلان کیا انہوں نے ژوب میں انسدادِ دھشت گردی عدالت کے قیام کا اعلان کیا اور لیبر کورٹ کیلئے موجودہ سیشن جج کو اختیار کا چارج دینے کا اعلان بھی کیا۔
چیف جسٹس بلوچستان ہائیکورٹ