اٹلی میں کورونا پابندیوں کے خلاف تاجروں کا احتجاج، سڑک بلاک کردی

اٹلی میں کورونا پابندیوں کے خلاف تاجروں کا احتجاج، سڑک بلاک کردی
اٹلی میں کورونا پابندیوں کے خلاف تاجروں کا احتجاج، سڑک بلاک کردی

  

میلان (سید وجاہت بخاری) اٹلی کے شہر تیورین میں  تاجروں نے بدھ کے روز کووڈ 19 کی پابندیوں کی وجہ سے طویل عرصے سے کاروبار کی بندش کے خلاف احتجاج کیا اور سڑک بلاک کردی۔

یہ احتجاج اس دن کے بعد ہوا جب روم میں پارلیمنٹ کے باہر ہونے والا  احتجاج پر تشدد ہو  گیا تھا جس کے نتیجے میں ایک پولیس افسر زخمی ہواتھا۔ پر تشدد احتجاج کے بعد سات افراد کو گرفتار کیا گیا  تھا۔

اس کے  ایک دن بعد  تاجروں نے کیسرٹا کے قریب موٹروے بند کردی جس کی وجہ سے کئی گھنٹوں تک ٹریفک بلاک رہی۔ حال ہی میں اٹلی میں کووڈ سے وابستہ بندشوں اور دوبارہ کھلنے کا مطالبہ کرنے کے حق میں احتجاج میں شدت آگی ہے  کیونکہ حکومت کی معاشی مدد کے دوسرے مرحلے میں تاخیر ہوئی ہے۔

تیورن میں بدھ کے روز متعدد دکان مالکان تجارت کرنے والوں کے ساتھ شامل ہوئے ، جن میں کچھ ایسے بھی شامل تھے جن کی دکانیں کھلی ہوئی ہیں۔

انہوں نے نعرے لگائے کہ  "ہم کام کرنا چاہتے ہیں" اور "ہم مزید انتظار نہیں کرسکتے "۔

مظاہرین سے شہر کے تاجروں کے کونسلر البرٹو ساکو نے ملاقات کی جس میں  انہوں نے  کہا  کہ وہ ان کے مطالبات حکومت تک  لے کر جائیں گے۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -