آن لائن میٹنگ کے دوران لڑکی کے کمرے میں ایسی چیز نظر آگئی کہ بیچاری پورے دفتر کے سامنے شرمندہ ہوگئی

آن لائن میٹنگ کے دوران لڑکی کے کمرے میں ایسی چیز نظر آگئی کہ بیچاری پورے دفتر ...
آن لائن میٹنگ کے دوران لڑکی کے کمرے میں ایسی چیز نظر آگئی کہ بیچاری پورے دفتر کے سامنے شرمندہ ہوگئی
سورس: Pixabay

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کی وباء آنے کے بعد سے بیشتر کاروباری میٹنگز اور کانفرنسز آن لائن ویڈیو کالنگ ایپلی کیشن ’زوم‘ پر ہو رہی ہیں اور اس نئے رجحان کے پنپنے سے کچھ شرمناک واقعات بھی بکثرت رونما ہو رہے ہیں۔ کبھی ٹیکنالوجی سے بے بہرہ کوئی شخص برہنہ حالت میں کیمرے کے سامنے آ جاتا ہے اور دیگر شرکاء شرم سے منہ چھپانے لگتے ہیں اور کبھی کوئی کیمرے کے سامنے ٹوائلٹ کا دروازہ کھلا چھوڑ کر ضروری کام شروع کر دیتا ہے اور میٹنگ میں شامل دیگر لوگ اسے دیکھ رہے ہوتے ہیں۔

اب برطانیہ میں ایک 32سالہ لڑکی کو اس رجحان کی وجہ سے شدید خفت اٹھانی پڑ گئی ہے۔ لندن کی رہائشی اس لڑکی کا نام نِکی فالکنر ہے جو ایپلی کیشن زوم پر اپنے باس اور دیگرلوگوں کے ساتھ میٹنگ میں تھی اور اس کے پیچھے ایک ایسی چیز پڑی ان لوگوں نے دیکھ لی کہ نکی شرم سے پانی پانی ہو گئی۔

 ڈیلی سٹار کے مطابق یہ چیز میاں بیوی کے خلوت کے لمحات میں استعمال ہونے والی ایک پراڈکٹ تھی۔ نکی کا کہناتھا کہ ”مجھے اپنی غلطی کا احساس آدھی میٹنگ گزر جانے پر ہوا لیکن تب تک وقت گزر چکا تھا۔ سب لوگ اس چیز کو دیکھ چکے تھے اور اب اسے وہاں سے ہٹانے کا کوئی فائدہ نہیں تھا۔ 

مزید :

ڈیلی بائیٹس -