Daily Pakistan
عمران الحق چوہان

عمران الحق چوہان پاکستانی مصنف اور مترجم ہیں جو اپنے سفر ناموں اور عالمی ادبی شاہکاروں کے ترجموں سے جانے جاتے ہیں۔24 فروری 1964 کو چنیوٹ میں پیدا ہوئے بسلسلہ تعلیم یونیورسٹی آف پنجاب ، لاہور میں ایل ایل بی کے دا خلے کے دوران صحافت کا آغاز کیا۔ 10سال لاہور ہی میں وکالت اور صحافت لیکن پھر بعض وجوہ کی بناءپر چنیوٹ واپس آگئے۔ چنیوٹ میں وکالت کے ساتھ ساتھ نجی تعلیمی ادارے میں معلمی اور پھر وکالت کو خیر باد کہہ کر کل وقتی معلم بن گئے۔
لکھنے کی ابتدا ءشاعری سے کی پھر نثر کی طرف رخ کیا اور عالمی ادبی شاہ کاروں کے ترجمہ سے آغاز کیا۔ پہلا ترجمہ میلکم ایکس کی سوانح عمری، ”گہر ہونے تک“ کے عنوان سے کیا جو لاہور سے شائع ہوا۔اس کے بعد پاکستان کے شمالی علاقوں کا سفر نامہ ”بستی بستی پربت پربت“ شائع ہوا، پھر انگریزی ناول ROOTS کاترجمہ”اساس“کے عنوان سے شائع ہوا۔وادی ہنزہ کا سفر نامہ”ہنزہ کے رات دن“ 2020 میں بک ہوم نے شائع کیا۔امریکی ادیب جان سٹائن بیک کے عظیم ناول The Grapes of Wrath کا ترجمہ ”کشت ستم“کے عنوان سے لاہور سے طبع ہوا۔مزید تراجم اور اگلے سفرنامے پر ان کاکام جاری ہے۔

مزیدخبریں

نیوزلیٹر





اہم خبریں