وقتِ پیری شباب کی باتیں|ابراہیم ذوق |

وقتِ پیری شباب کی باتیں|ابراہیم ذوق |
وقتِ پیری شباب کی باتیں|ابراہیم ذوق |

  

وقتِ پیری شباب کی باتیں

ایسی ہیں جیسے خواب کی باتیں

اُس کے گھر لے چلا مجھے دیکھو

دلِ خانہ خراب کی باتیں

واعظا چھوڑ ذکرِ نعمتِ خلد

کر شراب و کباب کی باتیں

سُنتے ہیں اُس کو چھیڑ چھیڑ کے ہم

کس مزے سے عتاب کی باتیں

ذکر کیا جوشِ عشق میں اے ذوق

ہم سے ہوں صبر و تاب کی باتیں​

شاعر: ابراہیم ذوق

 ( شعری مجموعہ:دیوانِ ذوق  )

Waqt-e-Peeri   Shabaab   Ki   Baaten

Aisi   Hen   Jaisay    Jaisay   Khaab   Ki   Baaten

 Uss   K   Ghar   Lay   Chalaa   Mujhay   Daikho

Dil-e-Khaana   Kharaab   Ki   Baaten

 Waaiza   Chorr   Zikr-e- Nemat -e-Khuld

Kar   Sharaab-o-Kabaab   Ki   Baaten

 Suntay   Hen   Uss   Ko   Chhairr   Chhairr   K   Ham

Kiss   Mazay   Say   Utaab   Ki   Baaten

 Zikr   Kaya   Josh-e-Eshq   Men   Ay   ZAUQ

Ham   Say   Hon   Sabr-o-Taab   Ki   Baaten

 Poet: Ibrahim   Zauq

 

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -غمگین شاعری -